193

کشمیر پریمیئر لیگ دنیائے کرکٹ کی نظر میں

یوں تو بھارت کو پاکستان سے خار اور نفرت کا کوئی موازنہ نہیں اور نہ یہ بات کسی سے ڈھکی چھپی ہے
لیکن تازہ ترین جو لاوا بھارتی حکومت اور کشمیر دشمن عناصر میں جوش مار رہا ہے اسکی سب سے بڑی وجہ
کشمیر پریمیئر لیگ ہے
پی ایس ایل کی بھر پور کامیابی کے بعد
پاکستان نے دنیائے کرکٹ میں باقاعدہ اور با ضابطہ طور پر
کشمیر پریمیئر لیگ کا نہ صرف اعلان کیا بلکہ کھلاڑیوں اور ٹیمز بھی اناوس کر دی گئی ہیں

پاکستان کی شان شاہد آفریدی بھوم بهوم لالہ اپنے چوکے اور چھکوں سے عوام کا لہو گرمائیں گے تو شعیب ملک اپنے سلجھے ہوئے ماہرانہ انداز سے لوگوں کے دل جیتیں گے تو
مظفر آباد لائنز کی قیادت سابق پاکستانی کپتان اور پاکستان کرکٹ کے پروفیسر محمد حفیظ کریں گے پاکستان کرکٹ پر مشکل حالات میں بھروسہ کرنے والا سری لنکا ایک بار پھر دل جیت گیا
سری لنکا کے سابق کھلاڑی تلکرتنے دلشان کی متوقع آمد سے مظفرآباد لائنز کی پوزیشن مستحکم کرتی نظر آ رہی ہے
بُہت سارے تنازعات کے بعد آخر کار
کشمیر پریمیئر لیگ کے تمام میچز کا شیڈول جاری کر دیا گیا ہے
پر امن آزاد کشمیر کی حسین وادیوں میں پاکستان زندہ باد کے نعروں کی گونج بھارت کی نیندیں حرام کرنے کے لئے کافی ہے
اور عالمی دنیا کے لئے لمحہ فکریہ جو مقبوضہ کشمیر پر ہونے والے ظلم و بربریت پر گزشتہ سات دہائیوں سے خاموشی اختیار کیے بیٹھے ہیں
کشمیر پریمیئر لیگ کا انعقاد بھارت کے مکروہ چہرے پر تماچہ مارنے کے لئے کافی ہے جو روز بروز مقبوضہ وادی میں ظلم کے پہاڑ توڑ رہا ہے
کشمیر پریمیئر لیگ پر ساری دنیا نظریں جمائے ہوئے ہے
ایک آزاد خود مختار ریاست کشمیر میں
غیر ملکی کھلاڑیوں نے کھیلنے سے انکار کر دیا
انگلینڈ کے سابق کھلاڑی مونٹی پنیسر،میٹ پرائر، فل مسٹرڈ اور اویس شاہ جنہوں نے پہلے کشمیر لیگ میں شرکت پر رضا مندی ظاہر کی تھی وہ اب کشمیر پریمیئر لیگ کا حصہ نہیں ہوں گے
آپ اسکو انسانیت کا پرچار کرنے والوں کا کشمیروں کے ساتھ دوہرا معیار بھی کہہ سکتے
ہیں تو بات لالہ آفریدی کی کی جائے تو لالہ راولا کوٹ کی نمائندگی کرتے دکھائی دیں گے تو مد مقابل دنیا کا منجھا ہوا بہترین کپتان شعیب ملک میرپور ہاکس کو لیڈ کریں گے
لالہ اور شیعب ملک پہلے ہی میچ میں آمنے سامنے ہوں گے سنسنی خیز ایونٹ کے تمام میچز مظفر آباد کرکٹ اسٹیڈیم میں کھیلے جائیں گے کورونا کے پیش نظر گنجائش کے 30 فی صد شائقین کو گراؤنڈ میں آنے کی اجازت ہو گی
ایونٹ کا فائنل 17 اگست کو ہو گا اور تمام میچز مظفر آباد میں کھیلے جائیں گے
بھارت نے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرتے ہوئے غیر ملکی کھلاڑیوں کو کشمیر پریمیئر لیگ کھیلنے سے تو روک لیا ہے لیکن وہ وقت زیادہ دور نہیں جب مقبوضہ کشمیر اور آزاد کشمیر ایک مکمل آزاد خود مختار ریاست کے طور پر پوری دنیا میں جانی جائے گی انشاء اللہ
بے ساختہ
اقبال کے تاریخ ساز الفاظ ذہن میں گردش کر رہے ہیں

پنجہ ظلم و جہالت نے برا حال کیا
بن کے مقراض ہمیں بے پر وبال کیا
توڑ اُس دست جفا کیش کو یا رب جس نے
روح آزادی کشمیر کو پامال کیا۔

تحریر؛ ارم چوھدری
آٔپ ارم چوھدری کو ٹویٹر پر بھی ‎@IrumWarraich4 فالو کرسکتے ہیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں